قومی اسمبلی میں فوجداری قانون ترمیمی ایکٹ2020پیش۔۔۔!!!پاک فوج یا اس کے کسی رکن کا تمسخر اڑانے پر کیا سز ا دی جائے گی؟ ناقابل یقین تفصیلات

اسلام آباد (ویب ڈیسک)قومی اسمبلی میں فوجداری قانون ترمیمی ایکٹ 2020پیش کردیا گیا جس کے مطابق پاک فوج اور اس کے کسی رکن کا مذاق اڑانے والوں کو سزائیں دی جائیں گی ۔مائیکرو بلاگنگ ویب سائٹ ٹوئٹرپر صحافی ارشد وحید چوہدری نے بتا یا کہ قومی اسمبلی میں فوجداری قانون ترمیمی ایکٹ 2020 پیش ،بل

حکومتی رکن امجدخان نے پیش کیا،مسلح افواج یا اس کے رکن کا جان بوجھ کر تمسخر اڑانا ،وقار کو گزند پہنچانا یا بدنام کرنا جرم تصور ہوگا ،ایسا کرنے والے کو 2سال تک قید اور 5 لاکھ روپے جرمانہ یا دونوں سزائیں دی جا سکیں گی۔ جبکہ دوسری جانب ایک خبر کے مطابق وزیراعظم عمران خان نےکہاہےکہ بڑے خواب دیکھنے والا ہی بڑے کام کرتا ہے،راوی ریور فرنٹ اربن ڈویلپمنٹ پراجیکٹ کے ذریعے نیا پاکستان کا تصور نظر آ رہا ہے، ماضی کے حکمران ملک کو قرضوں کی دلدل میں دھکیل کر چلے گئے، قرضوں کی واپسی کیلئے سخت فیصلے کرنا پڑے جس سے مشکلات آ رہی ہیں۔راوی ریور فرنٹ اربن ڈویلپمنٹ پراجیکٹ کے سنگ بنیاد رکھنے کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ مجھے اس منصوبہ میں نئے پاکستان کا تصور نظر آ رہا ہے، اس منصوبہ میں تمام پیسہ نجی شعبہ سے آئے گا جبکہ حکومت صرف سہولتیں فراہم کرے گی، اوورسیز پاکستانیز اس منصوبہ میں سرمایہ کاری میں بہت دلچسپی لے رہے ہیں۔ انہوں نے وزیراعلی پنجاب کو منصوبہ کی جلد سے جلد تکمیل کیلئے ٹیم تشکیل دینے کی ہدایت کی۔ انہوں نے کہا کہ نیا شہر بنانا آسان کام نہیں، مشکلات کا سامنا کرنا پڑے گا۔وزیراعظم نے کہا کہ لاہور میں پانی کا مسئلہ شدت سے بڑھ رہا ہے تاہم نئے شہر میں جو جھیلیں بنیں گی، اس سے لاہور شہر میں پانی کی سطح میں اضافہ ہو گا، لاہور میں 40 فیصد کچی آبادیاں ہیں، لاہور شہر تیزی سے پھیل رہا ہے، اس کے علاوہ لاہور شہر کے تمام سیوریج کے پانی کو ٹریٹمنٹ کے بعد راوی میں گرایا جائے گا جس سے دریائے راوی کا پانی صاف ہو گا۔ انہوں نے کہا کہ نیا شہر مکمل منصوبہ کے تحت تعمیر کیا جا رہا ہے اور ہم اس کو گرین سٹی بنائیں گے۔ وزیراعظم نے کہا کہ غریبوں، یتیموں اور بے سہارا افراد کی کفالت ریاست کی ذمہ داری ہے، ہم چاہتے ہیں کہ پاکستانی عظیم قوم بنیں، ہماری حکومت نے پہلی بار لوگوں کو صحت کارڈ دیے جبکہ پنجاب اور خیبرپختونخوا میں ہر خاندان کو صحت کارڈ دیا جائے گا، غریب طبقہ کیلئے ہیلتھ کارڈ اور ہیلتھ انشورنس منصوبے شروع کئے۔

loading...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *