’’ جب آرمی چیف ’ کیپٹن ‘ تھے، ہم نے سیاسی میدان میں کچی گولیاں نہیں کھائیں ، اس لیے ۔۔۔ ‘‘ مولانا فضل الرحمان کا فوج کے نام پیغام، بہت کچھ کہہ گئے

اسلام آباد( نیوز ڈیسک) مولانا فضل الرحمان کا کہنا ہے کہ ایک بات میں فوج کی قیادت سے کہنا چاہتا ہوں، میدانِ سیاست میں سینئر ہوں، ہم لوگوں نے کچی گولیا نہیں کھائیں، میں فوج کی قیادت سے بھی سینئر ہوں، جب آرمی چیف کیپٹن تھے تو میں پارلیمنٹ کا ممبر تھا،

دوسری جانب وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید احمد نے کہا ہے کہ مولانا ون آن ون ملاقات کا انکار کریں میں تاریخ اور جگہ بھی بتاؤں گا، تمام لیڈر 16 کی رات کو جنرل باجوہ سے ملے ہیں۔فیصل آباد میں گفتگو کرتے ہوئے شیخ رشید نے کہا کہ بلاول کہتا ہے کہ قومی سلامتی کے اجلاس میں اگر شیخ رشید ہوں تو میں نہیں آؤں گا، بلاول تم پیدا بھی نہیں ہوئے تھے تب میں قومی سلامتی کونسل کا ممبر تھا۔قومی سلامتی کے امور پر آئندہ کسی اجلاس میں اگر شیخ رشید ہوئے تو میں نہیں جاؤں گا‘شیخ رشید نے کہاکہ بلاول میں آپ کو جواب دے سکتا ہوں لیکن اخلاق کے دائرہ سے باہر نہیں جاسکتا۔انہوں نے کہا کہ نہ یہ استعفیٰ دیں گے، نہ دھرنا دیں گے، نہ عدم اعتماد لائیں گے۔ن لیگ کے رہنما محمد زبیر کے حوالے سے شیخ رشید نے کہا کہ زبیر کو چیلنج کرتاہوں ان کی 36 سال میں کبھی جنرل باجوہ سے ملاقات نہیں ہوئی، محمد زبیر نے خود ٹائم لیا، ایک ہفتے میں دو بار ڈی جی آئی ایس آئی کی موجودگی میں ملے۔شیخ رشید نے یہ بھی کہا کہ پیپلزپارٹی سندھ سے استعفیٰ نہیں دیگی، فضل الرحمان کو منہ کی کھاناپڑیگی۔وزیر ریلوے نے مزید کہا کہ بلاول سے پیار کرتا ہوں، وہ میرا پیارا ہے، بلاول سے پوچھیں میں نے اس کا کیا بگاڑا ہے۔جی ایچ کیو کو نہ سیاسی معاملات پر بلانا چاہیے اور نہ سیاسی قیادت کو وہاں جانا چاہییانہوں نے کہا کہ نواز شریف نے اپنی سیاست کی قبر خودکھودی ہے، جنوری میں ن سے ش نکلیگی، پیپلزپارٹی استعفیٰ نہیں دی گی، اگر استعفیٰ دیا تو سندھ سے بھی حکومت جائیگی۔

loading...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *