بریکنگ نیوز۔۔۔ !!! متعدد بھارتی فوجی ہلاک

سرینگر (نیوز ڈیسک ) مقبوضہ کشمیر میں منگل کو تین بھارتی فوجیوں سمیت آٹھ افراد برف کے تودے کے نیچے دب کر ہلاک ہوگئے۔کشمیرمیڈیا سروس کے مطابق ضلع کپوارہ کے علاقے مژھل میں تین بھارتی فوجی برف کے تودے کے نیچے دب کر ہلاک ہوگئے ہیں جبکہ دو فوجی ابھی تک لاپتہ ہیں۔ بھارتی فوج کا کہنا ہے

کہ کشمیر میں رام پور اور گریزسیکٹروں میں کئی مقامات پر فوجی چوکیوں کو برف کے تودوں کا سامنا کرنا پڑا۔فوجی ذرائع نے کہاکہ برف کے تودوں سے متاثرہ علاقوں میں امدادی کارروائیاں جاری ہیں ۔ گزشہ ہفتے ضلع پونچھ میں بھی برف کے تودے سے بھارتی فوج کا ایک پورٹر ہلاک اور تین فوجی زخمی ہوگئے تھے۔ دریں اثناء ضلع گاندربل میں پانچ افراد برف کے تودے کے نیچے آکر جاں بحق ہوگئے ۔ یہ افرادضلع میں سونہ مرگ کے علاقے کولن گاگنگیر میں جاں بحق ہوگئے۔ایک سرکاری افسر کا کہنا ہے کہ شدید برفباری کے باعث سرینگر کے ساتھ علاقے کا سڑک کا رابطہ منقطع ہے اس لئے امدادی ٹیم کوپیدل علاقے میں بھیج دیا گیاہے۔ دوسری جانب آزاد کشمیر میں برف باری نے معصوم جانیں لے لیں۔تفصیلات کے مطابق ابھی تک برفانی تودے کے نیچے آ کر جان بحق ہونے والوں کی تعداد 49 ہو چکی ہے جبکہ بہت سے افراد کو ابھی تلاش کیا جا رہا ہے۔ جا ن بحق ہونے والوں میں زیادہ تر تعداد خواتین کی بتائی جا رہی جبکہ جان بحق ہونے والوں میں کثیر تعداد بچوں کی بھی شامل ہے۔یاد رہے کہ اس موسم میں سردی کی لہر نے پورے ملک کو اپنی لپیٹ میں لیا

ہوا ہے ۔ سردی کی شدت نے پورے ملک میں ریکارڈ توڑے ہیں۔ایسے موسم میں پہاڑی علاقوں میں بھی موسم زیادہ خراب ہو گیا تھا جس کا نتیجہ برف باری کی صورت میں دیکھنے میں آیا ہے۔اسی برف باری کا سامنا کرتے ہوئے بے شمار لوگوں نے اپنی زندگی سے ہاتھ دھو لیا۔تفصیلا ت کے مطابق آزاد کشمیر میں برفانی تودہ گرنے سے 49 افراد جان بحق ہو گئے ہیں جبکہ بہت سے لوگوں کا ابھی پتہ لگایا جا رہا ہے۔یاد رہے کہ ریکارڈ برف باری کی خبریں گزشتہ ماہ سے میڈیا میں گردش کر رہی ہیں جس کے بعد میدانی علاقوں میں بھی موسم کی شدید سخطی دیکھنے میں آئی ہے۔دوسری طرف یہ بھی دیکھا گیا ہے کہ لوگوں کی ایک کثیر تعداد نے اس موسم میں سیاحت کے مقامات جانے کا بھی فیصلہ کیا،لیکن بہت سے لوگوں کے لئے سیاحت کے لئے جانا وبال جان بن گیااور وہ لوگ جان سے ہاتھ دھو بیٹھے۔تازہ ترین تفصیلات کے مطابق ابھی تک آزاد کشمیر میں 49 جبکہ وادی نیلم میں برفانی تودے نے ابھی تک 60 افراد کی جان لے لی ہے جس میں خواتین اور بچوں کی تعداد شامل ہے۔یاد رہے کہ ابھی بھی لوگوں کی ایک کثیر تعداد کا پتہ نہیں لگایا گیا،ان کی تلاش ابھی بھی جاری ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *